37

مائینگ/معدنیات اور لیز میں نئی قانون سازی میں منصفانہ تقسیم بندی کے ساتھ مالکانہ حقوق کا خیال رکھا جاۓ

گلگت(جنرل رپورٹر)مائینگ/معدنیات اور لیز میں نئی قانون سازی میں منصفانہ تقسیم بندی کے ساتھ مالکانہ حقوق کا خیال رکھا جاۓ اور لیز سسٹم کو ختم کر کے صرف راہداری دی جاۓ سیاسی و سماجی نوجوان رہنما سخی احمد نذیر نے بدھ کے روز سنٹرل پریس کلب گلگت میں پریس کانفرنس کرتے ہوۓ کہا کہ مائننگ معدنیات اور لیز میں نئی قانون سازی اور منصفانہ تقسیم بندی کے ساتھ مالکانہ حقوق دیے جاۓ گلگت بلتستان کے زمینوں کی منصفانہ تقسیم بندی کو جلد سے جلد عمل میں لایا جائے اور گورنمنٹ کے استعمال میں لائے گئے عوامی زمینوں کے معاوضوں کو فوری طور پر اد کیا جائے یونیورسٹی اور بلتستان یونیورسٹی کو بجٹ میں سے پیسے رکھے جائیں تاکہ بچیوں کی فیسوں میں کمی کی جاسکے اور گلگت بلتستان کے تمام تمام بچیوں کی وفاقی یونیورسٹیز میں ان کی فیس میں کمی کی جائے یہ عمل ہر ملک میں پہاڑی علاقوں کے بچوں کے لیے ہوتا ہے کیونکہ سال میں چھ مہینے پہاڑی علاقوں میں نظام زندگی معطل رہتی ہے سردیوں کی وجہ سے تین سیاسی ورکروں کو قوم پرستی کی بنیاد پر ان کے اوپر معاشی اور غیر اخلاقی ظلم ختم کیا جائے اور ان کو بھی حکومت میں قانون سازی اور فیصلوں کی جگہ دی جائے گلگت بلتستان کا وفاق کے ساتھ کیے گئے معاہدہ کراچی کو عوام کے سامنے لایا جائے یا پھر دوبارہ الحاق کی راہ ہموار کیا جائے جو عوامی بنیاد پر ہو۔ نمبرداروں کو ان کے پورے اختیارات دیے جائیں اور عوام کے چنے ہوئے سٹیک ہولڈرز کو فیصلوں میں شامل کیا جائے غیر اخلاقی سٹیک ہولڈرز کو فیصلوں میں نہ رکھا جائے گلگت حکومت گلگت بلتستان کے اداروں کی غیر قانونی رویہ اور گلگت بلتستان اسمبلی فعال نہ ہونے کی وجہ سے ان فیصلوں کو عوام کے درمیان لانے کا فیصلہ کیا ہے جس میں انے والے وقتوں میں احتجاج اور جدوجہد کو جاری رکھا جائے گا اور اگر ان تحفظات کے اوپر عمل درامد نہ ہوا تو احتجاجی تحریک شروع کرینگے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں